Ultimate magazine theme for WordPress.
GFS builders

پی ٹی آئی نے ملیر اور سانگھڑ کی نشستوں پر فنکشنل لیگ سے حمایت مانگ لی

57

کراچی (آن لائن نیوز روم) پاکستان تحریک انصاف اور فنکشنل لیگ کے رہنماؤں کی اہم ملاقات ہوئی جس میں فنکشنل نے اپنے خدشات سے پی ٹی آئی کے وفد کو آگاہی دے دی۔ تحریک انصاف نے ملیر اور سانگھڑ کی نشستوں پر حمایت مانگ لی، ملاقات میں فنکشنل لیگ سندہ کے جنرل سیکریٹری اور جی ڈی اے کے اطلاعات سیکریٹری سردار عبدالرحیم،ایم پی اے نند کمار گوکلانی جبکہ پی ٹی آئی کی جانب سے اپوزیشن لیڈر فردوس شمیم نقوی،ایم پی اے حلیم عادل شیخ،خرم شیر زمان اور دیگر شامل تھے۔ ملاقات کے بعد میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر فردوس شمیم نقوی نے کہا کہ سندھ میں 13سالوں سے عوام پر جو ظلم ہورہا ہے اس کے خاتمے لانے کیلیے تمام جماعتوں کو آگے آنا ہوگا،سندہ میں تین نشستوں پر ضمنی انتخابات ہورہے ہیں ،جہاں جس جماعت کا مضبوط امیدوار ہوگا اس کو سپورٹ کی جائے گی،ہم پیر پگارا کے احسان مند ہیں جب سے وہ وفاق میں ہمارے اتحادی بنیں ہے ہر مشکل وقت میں انھوں نے ہمیں مدد دی ہے،ہمیں پوری امید ہے مثبت جواب ملے گا۔ اس موقع پر سردار عبدالرحیم نے کہا اہم میٹنگ تھی،ضمنی انتخابات کے حوالے بات چیت ہوئی عمر کوٹ میں ارباب رحیم جی ڈی اے اور اتحادیوں کے مضبوط امیدوار ہے، میدان خالی نہیں چھوڑنا چاہیے،سانگھڑ اور پی ایس 88 پر ہونے والے ضمنی انتخابات پر بھی اتحاد کی بات ہوئی ہے، ایم کیو ایم سے بھی مطالبہ کروں گا کہ ضمنی انتخابات پر مضبوط مؤقف رکھے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں کہا گیا تھا کہ سندھ میں ترقیاتی کاموں پر جی ڈی کو اعتماد میں لیا جائے گا جو کہ نہیں ہوا،سندھ کے جزائر پر ہمیں سخت خدشات ہیں،پی ٹی آئی نے جزائر پر اپنی غلطی تسلیم کی ہے، وہ آرڈیننس بھی شاید ختم ہوگیا ہے،ایم کیو ایم بھی وفاقی حکومت کی اتحادی ہے وہ بھی مشترکہ امیدوار لانے کہ لیے ساتھ دے۔ ایک سوال کے جواب میں شمیم نقوی نے کہا کہ اتحادیوں کی شکایتیں ختم کی جائیں گے،پی ڈی ایم اتحاد ڈیڈی اور مولانا بچاؤ مہم ہے،پی ڈی ایم صرف استعفیٰ لہرانے کے لیے تھی،وہ بھی ابھی سردی کی وجھ سے لہرا نہیں پارہی،سردار رحیم نے کہا کہ وہ حکمت کا علاج کرواتے ہیں اور  ہیلتھ کارڈ پر یقین نہیں کرتے،پی ڈی ایم والے کوئی بیچ کا راستہ نکالیں۔

تبصرے بند ہیں، لیکن فورم کے قوائد اور لحاظ کھلے ہیں.