Ultimate magazine theme for WordPress.

‘میرا جسم میری مرضی’ سے اتفاق نہیں کرتی، مجھے کبھی جنسی ہراساں نہیں کیا گیا:سونیا حسین

0 83

کراچی: پاکستان کی نامور اداکارہ سونیا حسین نے ہر سال 8 مارچ کو منعقد ہونے والے ‘عورت مارچ’ اور اس میں لگائے نعروں کو فضول قرار دیدیا ہے۔ ایک انٹرویو میں اداکارہ سونیا حسین نے کہا یے کہ ‘فیمنزم کو لوگ عموماً غلط سمجھتے ہیں، لوگ سمجھتے ہیں یہ فیمنسٹ ہیں تو مردوں سے نفرت کرتی ہوں گی لیکن ایسا نہیں ہے، فیمنزم صرف برابری ہے عورتوں اور مردوں دونوں کے حقوق پر بات کرنا ہے’۔ ‘اگر عورت گھر میں کھانا بنا سکتی ہے تو مرد بھی بنا سکتا ہے، لیکن یہ روٹی والا جو نعرہ بنایا گیا تھا میں اس کے حق میں بالکل نہیں’۔ اداکارہ نے بتایا کہ ‘عورت مارچ میں لگائے نعروں سے میں بالکل اتفاق نہیں کرتی، میرا خیال ہے کہ جب آپ کسی چیز کو لے کر حد سے بڑھ جائیں تو پھر ایسا ہی کرتے ہیں’۔ عورت مارچ میں لگائے ایک نعرے ‘میرا جسم میری مرضی’ کے سوال کے جواب میں سونیا حسین نے کہا کہ ‘میں اس بات سے بھی اتفاق نہیں کرتی، زندگی میں کچھ باتیں اہم ہوتی ہیں اور وہ صرف خواتین کے لیے نہیں مردوں کے لیے بھی ہوتی یقیناً اہم ہوں گی’۔ انٹرویو کے دوران ایک سوال کے جواب میں سونیا نے کہا کہ میں نے کبھی جنسی ہراسانی کا سامنا نہیں کیا، لیکن ہوسکتا ہے کہ کچھ لڑکیوں کو اس کا سامنا کرنا پڑا ہو’۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.