Ultimate magazine theme for WordPress.

پتا چلا ہے کہ شہباز شریف آج کل نیب تحویل میں بڑی خفیہ ملاقاتیں کر رہے ہیں: شہزاد اکبر

0 44

اسلام آباد (آن لائن نیوز روم) وزیراعظم عمران خان کے مشیر برائے احتساب شہزاد اکبر کے مطابق انہیں پتا چلا ہے کہ شہباز شریف آج کل نیب تحویل میں بڑی خفیہ ملاقاتیں کر رہے ہیں۔ لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے شہزاد اکبر کا کہنا تھا کہ شہباز شریف نیب کی عدالت میں جا کر ڈرامے کرتے ہیں، ابھی شہباز شریف کے کاروبار کا فرانزک ہونا ہے اس لیے ذہنی اضطراب کا شکار ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ نیب کو شریف فیملی کی کرپشن کا ایک اور ریفرنس موصول ہوا ہے، العربیہ شوگر ملز اور رمضان شوگر ملز کے 10 سالہ ریکارڈ کا جائزہ لیا گیا تو بہت ہی حیران کن چیزیں سامنے آئی ہیں کہ ان کمپنیوں کے کم آمدنی والے ملازمین کے نام پر بے نامی اکاؤنٹس بنائے گئے اور ان اکاؤنٹس کے ذریعے سے 22 ارب روپے سے زائد کی منی لانڈرنگ کی گئی۔ شہزاد اکبر نے بتایا کہ کم آمدنی والے 12 ملازمین کے نام کھولے گئے بے نامی اکاؤنٹس کے ذریعے 15 ارب روپے کی منی لانڈرنگ کی گئی جب کہ دیگر کچھ ملازمین کے نام پر 7 ارب روپے کی منی لانڈرنگ کی گئی جو کہ ڈبل فیک کمپنیاں تھیں۔ شہزاد اکبر نے شہباز شریف سے پہلا سوال کیا کہ کیا آپ مسرور انور اور شعیب قمر کو نہیں جانتے؟ شہزاد اکبر کے مطابق شعیب قمر اور مسرور انور دونوں نیب کی حراست میں ہیں، 20 سے 25 ہزار روپے کے ملازم ہیں اور ان کے ذریعے اربوں روپے کی ٹرانزیکشن کی گئی۔ شہزاد اکبر نے دوسرا سوال کیا کہ  آپ خادم اعلیٰ تھے اور آپ کو تو ایک ایک چیز کا علم ہوتا تھا تو آپ کو اپنے کاروبار کا نہیں پتہ تھا؟ آپ کو ان چیزوں کا علم نہیں تھا کہ آپ کے اکاؤنٹ میں کون پیسے ڈلوا رہا تھا؟ انہوں نے تیسرا سوال کیا کہ آپ نے لندن کے 4 فلیٹس کیسے لیے؟ آپ کے اپنے مطابق آپ کے پاس کوئی ذرائع آمدن نہیں ہے تو پھر یہ فلیٹس کیسے لے لیے؟ مشیر داخلہ برائے احتساب نے کہا کہ شہباز شریف کے خاندان کے لوگ لندن میں گزر بسر کیسے کر رہے ہیں؟ کیا آپ کا خاندان سٹیزن شپ حاصل کر چکا ہے، اگر وزٹ ویزے پر ہیں تو وزٹ ویزے پر تو 6 ماہ سے زیادہ نہیں رہ سکتے؟ 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.