Ultimate magazine theme for WordPress.

"کورونا” نے خواتین سے اپنے بناؤ سنگھار کا حق بھی چھین لیا

0 332

کراچی: کراچی اور اسلام آباد میں جب سے چند پاکستانیوں کے “کورونا وائرس” سے متاثر ہونے کے کیس سامنے آئے ہیں ملک کے دیگر بڑے شہروں میں اس کا خوف بری طرح پھیل گیا ہے جس کے باعث “خواتین” نے اپنے بناؤ سنگھار تک کی قربانی دے ڈالی ہے. خواتین نے اس بابت زیادہ سے زیادہ احتیاط کرنا شروع کردیا ہے کہ کوئی “نامحرم” مطلب کوئی انجان خاتون انہیں نہ چھو پائے. اس کے نتیجے میں پچھلے 2 دنوں کے اندر بیوٹی سیلون اور پارلرز کا بزنس 50 فیصد سے بھی کم ہو کے رہ گیا ہے، سیلون ویران ہوگئے ہیں اور بیوٹی پارلرز پر سناٹا چھانے لگا ہے. شہروں میں بیوٹیشن لڑکیوں اور بناؤ سنگھار یعنی میک اپ سروسز فراہم کرنے والے سب سے بڑے ادارے کو ملنے والے “آرڈرز” میں تشویشناک حد تک کمی آئی ہے ۔ دوسری جانب بناؤ سنگھار کی ماہر میک اپ آرٹسٹ لڑکیوں / خواتین سے کہا گیا ہے کہ ہر ماسک کے استعمال کی عمر صرف 4 گھنٹے ہے لہٰذا کوئی بھی ایک ماسک کو 4 گھنٹے سے زیادہ منہ پر نہ چڑھائے . اگر کسی “کلائنٹ” کا کام 4 گھنٹے سے زیادہ ہو تو اسے تبدیل کر کے نیا ماسک پہنا جائے جبکہ ماسوائے “فیشل” کے میک اپ کے دیگر تمام کاموں کے دوران “کلائنٹ” یعنی گاہک خاتون کے منہ پر بھی ماسک چڑھائے رکھا جائے ، کلائنٹ ماسک پہننے پر آمادہ نہ ہو تو اسے خدمات فراہم کرنے سے انکار کر دیا جائے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.